پاکستان

آزادی مارچ کیا گل کھلائے گا؟

یہ آزادی مارچ پاکستان کی سیاسی تاریخ میں تبدیلیاں لانے کا باعث بن سکتا ہے مگر اور زیادہ دائیں جانب؛ شائد فوری نہیں مگر بنیادیں تو اس نے رکھ دی ہیں۔
محنت کش طبقہ اس مارچ سے الگ اپنی عوامی تحریک سے ان سرمایہ درانہ، جابرانہ اور سامراجی ایجنڈے پر کام کرتی حکومت کے خلاف جدوجہد جاری رکھے گا مگر کسی بھی جواز پر ان کے ساتھ مل کر سیاست کرنے کو تیار نہیں۔

شاہی جوڑے کے گائڈڈ ٹور کے لئے چند تجاویز!

یہ بات بھی شاہی مہمانوں کے لئے باعثِ اطمینان ہو گی کہ جو لکیر انکے خاندان نے کھینچی تھی، کیسی انمٹ کیسی خونی اور کتنی گہری ہے۔ واہگہ سے جلیانوالہ زیادہ دور نہیں مگر وہاں لے جانا ہماری ذمہ داری نہیں۔ واہگہ کے پار ان کے ہندو غلام جانیں اور شاہی جوڑا جانے کہ ہندوستان جا کر انہوں نے کیا کرنا ہے۔

لنگر خانے: نادار شہریوں کی توہین

اس پارٹنر شپ سے عوام کی بھوک تو ختم نہیں ہو سکتی لیکن چند ہزار افراد کو ملازمتیں فراہم کرنے کی بجائے انہیں کھانے پر ٹرخا کے سیاسی فوائد اٹھانے کا دعویٰ کیا جائے گا۔ ہم حقارت کے ساتھ ایسے اقدامات کو رد کرتے ہیں کیونکہ ہم سمجھتے ہیں کہ خیرات کسی مسئلے کا حل نہیں ہے، حل اس نظام کی تبدیلی ہے۔