دنیا

پاکستان، انڈیا اور بنگلہ دیش میں جمہوریت کی آڑ میں گھناؤنی سیاست کا ڈھونگ جاری ہے!

مقررین کا کہنا تھا کہ مجموعی طورپر جنوبی ایشیا میں جمہوریت ایک ایسے دور سے گزر رہی ہے جہاں انسانی حقوق کی پامالی، اقلیتوں کا استحصال اور سیاسی و مالی بدعنوانیاں روزانہ کا معمول ہو گئے ہیں۔ جمہوریت صرف الیکشن کرانے کا نام نہیں بلکہ لوگوں کو ان کی پرامن طورپر آواز اٹھانے کا حق دینا ہر شہری کا بنیادی حق ہے۔ انہوں نے زور دیا کہ جنوبی ایشیا کے ملکوں کے درمیان تجارتی اور عوامی سطحوں پر تعاون کی ضرورت ہے۔

امریکہ نے شہزادہ سلمان کو جمال خشوقجی کے قتل کا ذمہ دار قرار دیدیا: سعودی افسران پر پابندیاں

مبصرین کے مطابق ان اقدامات سے ظاہر ہو رہا ہے کہ نئی امریکی انتظامیہ اپنی خارجہ پالیسی کو انسانی حقوق اور جمہوری روایات کی پاسداری سے منسلک کرنے میں سنجیدہ ہے لیکن خارجہ پالیسی میں بنیادی جہتوں کی تشکیل نو کی امید ابھی قبل از وقت ہے۔

ایل او سی پر جنگ بندی معاہدہ: محنت کشوں کی نجات سرمایہ داری پر وار سے ممکن ہے!

اس خطے کے محنت کشوں اور نوجوانوں کا مسیحا اور انکے دکھوں کا مداوا کرنے والا ’خود ان‘ کے سوا کوئی اور نہیں ہے۔ محنت کشوں کا اتحاد اور سرمایہ دارانہ نظام اور اسکے سامراجی کھلواڑ کے خلاف فیصلہ کن جنگ کےلئے تاریخ کے میدان میں اترنا ہی راہ نجات ثابت ہو سکتا ہے۔

مقبول بٹ شہید کا یوم شہادت: سوشل میڈیا پر پابندیاں اور ’آزاد‘ حکومت کا نوٹیفکیشن

مقبول بٹ شہید کے نظریات، افکار اور لہو رنگ جدوجہد اس خطے سے غلامی، جہالت، فرسودگی اور ہر طرح کے استحصال کے خاتمے کیلئے جدوجہد کے عزم اور جرأت کی ایک ان مٹ داستاں بھی رقم چکی ہے جس کی حتمی فتح تک یہ کارروانِ آزادی چلتا رہے گا، یہ شمع آزادی جلتی رہے گی۔

فوجی بغاوت کے خلاف عوامی بغاوت: ریاستی کریک ڈاؤن و فائرنگ سے ہلاکتوں کی اطلاعات

دنیا بھر میں انسانی حقوق کی تنظیموں اور سیاسی و سماجی رہنماؤں نے میانمار میں ہونیوالی فوجی بغاوت اور احتجاج پر ریاستی کریک ڈاؤن کی شدید مذمت کی ہے۔ فوجی بغاوت کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین پر کریک ڈاؤن کئے جانے کی اطلاعات کے بعد دنیا بھر سے سوشل میڈیا پر میانمار میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف آواز اٹھائی جا رہی ہے۔

ٹرالی ٹائمز: پنجاب وچ ادانی

ادانی سموہ نے اشتہاراں راہیں دسیا کہ اس دی پنجاب دی کھیتی تے زمین وچّ کوئی دلچسپی نہیں تے پر سچائی ایہہ ہے کہ ادانی سموہ دی کھیتی وچ خوب دلچسپی ہے، پر پنجاب وچ اس سموہ نے حالے کھیتی وچ پیر نہیں رکھیا۔