شاعری

تعبیر

قیصرعباس

صبح دم آج
مری نیند بھری آنکھ
گئی شب کے حسیں خواب کی
ہلکی سی جھلک لے
لے کے اٹھی!
دور وادی میں کہیں
ناچتے گاتے بچے
ُپھول چہروں پہ سجی
کھیلتی ہنستی آنکھیں
کھلکھلاتی ہوئی شاموں میں
جوانی کی مہک
رقص کرتی ہوئی
راتوں میں حنا کے صد رنگ
لہلہاتے ہوئے کھیتوں میں
نئی فصل کی بھینی خوشبو!
زندگی رنگِ شفق
رنگ ِ صدا
رنگِ بہار!
کانپتے ہاتھ مرے
ایک دعا کو اٹھے
اے خدا!
آج مرے خواب کی
تعبیر ملے یا نہ ملے
معجزے ہوں کہ نہ ہوں
پھر بشارت نئی صبحوں کی
ملے یا نہ ملے!
اے خدا!
آج کوئی اچھی خبر
شہرِآشوب سے
اس شہرِبتاں تک پہنچے!

Qaisar Abbas

ڈاکٹر قیصرعباس روزنامہ جدوجہد کی مجلس ادارت کے رکن ہیں۔ وہ پنجاب یونیورسٹی  سے ایم اے صحافت کے بعد  پاکستان میں پی ٹی وی کے نیوزپروڈیوسر رہے۔ جنرل ضیا کے دور میں امریکہ آ ئے اور پی ایچ ڈی کی۔ کئی یونیورسٹیوں میں پروفیسر، اسسٹنٹ ڈین اور ڈائریکٹر کی حیثیت سے کام کرچکے ہیں۔ آج کل سدرن میتھوڈسٹ یونیورسٹی میں ایمبری ہیومن رائٹس پروگرام کے ایڈوائزر ہیں۔