اداریہ


روزنامہ جدوجہد! پہلی سالگرہ مبارک

ہمارا اپنے اس عظیم ساتھی سے وعدہ ہے کہ ہم اُس مشن کی تکمیل کے لئے جدوجہد کے پلیٹ فارم سے بساط بھر کوشش جاری رکھیں گے جس کے لئے کامریڈ لال خان نے عمر بھر ناقابل مصالحت جدوجہد کی۔

دلی میں مسلم کش فساد: حکومت مخالف احتجاج ختم کرنے کا فسطائی حربہ

ان فسادات کا واضح مقصد شہریت ترمیم بل کے مسئلے پر ہفتوں سے جاری احتجاج کو بزور تشدد ختم کرنا تھا۔ اس کا واضح ثبوت بی جے پی کے رہنما کپل شرما کا یہ بیان ہے جس میں انہوں نے کہا کہ”اگر پولیس نے ٹرمپ کا دورہ ختم ہونے تک دھرنے ختم نہ کروائے تو بی جے پی خود کروا لے گی اور اگر ٹرمپ کا دورہ نہ ہو رہا ہوتا تو وہ مظاہرین سے خود نپٹ لیتے“۔

جبر کی نئی لہر: پی ٹی ایم اور بایاں بازو نشانے پر

پاکستان میں بھی تشدد کام نہیں آئے گا۔ پی ٹی ایم کے مطالبات بھلے پشتون خطے سے باہر عوامی حمایت حاصل کرنے میں ناکام رہے ہیں مگر حکومت کے خلاف معاشی دہشت گردی کی وجہ سے جو لاوا پک رہا ہے وہ عنقریب پھوٹنے والا ہے۔

جدوجہد امید کا سرچشمہ ہے!

ہم کھل کر یہ اعلان کرتے ہیں کہ بنیادی انسانی حقوق، جمہوریت، ترقی پسندانہ سوچ اور مظلوم و محنت کش طبقات کے ساتھ کھڑے ہیں۔