شاعری

در جاناں

قیصر عباس

ہر لحظہ غنیمت ہے اگر ہاتھ میں ہے جام
ہر وقت سپھل وقت ہے کیا دیجئے الزام
یہ رنگِ بہاراں بھی ترے دم سے ہے ساقی
ہمراہ ترے فاصلہ شوق ہے دوگام

اندیشہ دوراں سے پرے اپنا ٹھکانا
ان نیلگوں آنکھوں میں کوئی غم نہ سجانا
موسم بھی ہے، ساقی بھی، سمندر بھی ہوا بھی
لیکن در جاناں سے کہیں دور نہ جانا

ڈاکٹر قیصرعباس روزنامہ جدوجہد کی مجلس ادارت کے رکن ہیں۔ وہ پنجاب یونیورسٹی  سے ایم اے صحافت کے بعد  پاکستان میں پی ٹی وی کے نیوزپروڈیوسر رہے۔ جنرل ضیا کے دور میں امریکہ آ ئے اور پی ایچ ڈی کی۔ کئی یونیورسٹیوں میں پروفیسر، اسسٹنٹ ڈین اور ڈائریکٹر کی حیثیت سے کام کرچکے ہیں۔ آج کل سدرن میتھوڈسٹ یونیورسٹی میں ایمبری ہیومن رائٹس پروگرام کے ایڈوائزر ہیں۔