Month: 2021 دسمبر

حارث قدیر کا تعلق پاکستان کے زیر انتظام کشمیر کے علاقے راولا کوٹ سے ہے۔  وہ لمبے عرصے سے صحافت سے وابستہ ہیں اور مسئلہ کشمیر سے جڑے حالات و واقعات پر گہری نظر رکھتے ہیں۔


خیبر پختونخواہ: ’پی ٹی آئی والے خود کہہ رہے ہیں کہ وہ مرکزی حکومت کی وجہ سے ہارے‘

گزشتہ بلدیاتی انتخابات 2015ء میں ہوئے تھے، ان میں بھی یہ مسئلہ تھا کہ ضلعی ناظم کے پاس اختیارات بہت کم تھے۔ اس حد تک تو ٹھیک ہے کہ بیرومیٹر کی طرح ان الیکشن سے مستقبل کے عام انتخابات کا ٹرینڈ معلوم ہو جاتا ہے۔ تاہم بلدیاتی انتخابات کا جو مقصد ہوتا ہے کہ صوبے سے اختیارات نچلی سطح پر منتقل کئے جائیں، وہ نہیں ہو رہا ہے۔ سیاسی سرگرمی ہو گئی ہے، لیکن جب یہ منتخب نمائندے حلف لیں گے تو ان کے پاس کام کرنے کے اختیارات بہت کم ہونگے۔

40 فیصد افغان میڈیا بند، 80 فیصد خواتین صحافی بے روزگار

15 اگست سے اب تک کل 231 میڈیا اداروں کو بند کرنا پڑا ہے اور 6400 سے زائد صحافی اپنے ملازمتوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ خواتین صحافیوں کو سب سے زیادہ نقصان پہنچا ہے اور ہر 5 میں سے 4 خواتین صحافی اب کام نہیں کر رہی ہیں۔

چلی کے نو منتخب سوشلسٹ صدر گیبریل بورک کون ہیں؟

’گارڈین‘ کے مطابق گیبریل بورک کا تعلق طالبعلم رہنماؤں کی اس ریڈیکل نسل سے ہے جو آمر آگسٹو پنوشے کی تلخ میراث کو ہمیشہ کیلئے دفن کرنے کیلئے پر عزم ہیں۔ انہوں نے اپنی ابتدائی جیت کی رات ہی اسٹیج سے اعلان کیا تھا کہ ”چلی نیو لبرل ازم کی جائے پیدائش تھی اور یہی اب اسکی قبر بھی ہو گی!“

سوشلسٹ امیدوار گیبریل بورک چلی کا صدر بن گیا

حالیہ انتخابی مہم کے دوران انہوں نے جنرل آگسٹو پنوشے کی آمریت کے دوران اپنائے گئے نیو لبرل معاشی ماڈل کو دفن کرنے، سماجی خدمات کو بڑھانے، عدم مساوات کے خاتمے کیلئے جدوجہد کرنے اور ماحول کے تحفظ کو بڑھانے کیلئے امرا پر ٹیکس بڑھانے جیسے وعدے کئے ہیں۔

عمران خان افغانوں کی ترجمانی مت کریں: حامد کرزئی

اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) میں عمران خان کے خطاب کے جواب میں حامد کرزئی نے انہیں افغانستان کے خلاف پروپیگنڈہ کرنے سے باز رہنے کا مشورہ دیا اور اسے ’افغانوں کا اندرونی معاملہ‘ قرار دیا ہے۔

جمعیت کا تازہ کارنامہ: پنجاب یونیورسٹی کی طالبہ سے زیادتی کی کوشش اور ویڈیو

وکٹم بلیمنگ کا سلسلہ براہ راست نہ بھی ہو تو بالواسطہ طور پر یہ طالبات کو بتایا جا رہا ہے کہ انہیں کیمپس کے احاطہ میں بھی کلاس کے اندر ہی رہنا چاہیے اور کلاس سے نکل کر سیدھا گھر جانا چاہیے یعنی آپ لوگ باہر نکلا ہی نہ کریں تاکہ کوئی آپ کو ہراساں نہ کر سکے۔