شاعری

کل میرا ہے!

قیصر عباس

جن کے لہجے میں خدائی کا غرور
ان کے کھیتوں پہ حکومت میری
جن کے ہونٹوں پہ مری تعزیریں
ان کے کھلیان میں محنت میری

لوگ میرے ہیں سیاست ان کی
بستیاں ان کی گوالے میرے
نیند ان کی ہے تو سپنا میرا
تیرگی ان کی اجالے میرے

نقش پا ان کے قدم میرا ہے
سنگِ میل ان کے سفر میرے ہیں
یہ زمیں میری ہے گھر میرا ہے
میری مٹی کے کھنڈر میرے ہیں

ان کی جاگیر ہے میرے دم سے
فصل ان کی ہے تو ہل میراہے
ان کی تاریخ ہے میرے دم سے
آج ان کی ہے تو کل میرا ہے

Qaisar Abbas

ڈاکٹر قیصرعباس روزنامہ جدوجہد کی مجلس ادارت کے رکن ہیں۔ وہ پنجاب یونیورسٹی  سے ایم اے صحافت کے بعد  پاکستان میں پی ٹی وی کے نیوزپروڈیوسر رہے۔ جنرل ضیا کے دور میں امریکہ آ ئے اور پی ایچ ڈی کی۔ کئی یونیورسٹیوں میں پروفیسر، اسسٹنٹ ڈین اور ڈائریکٹر کی حیثیت سے کام کرچکے ہیں۔ آج کل سدرن میتھوڈسٹ یونیورسٹی میں ایمبری ہیومن رائٹس پروگرام کے ایڈوائزر ہیں۔