Day: مئی 3، 2024

[molongui_author_box]

یوم مزدور:  تاریک عہد میں امید کا استعارہ

آج کی سرمایہ داری سے کسی استحکام خوشحالی اور بہبود کی توقع رکھنا حماقت بلکہ  جُرم کے مترادف ہے۔ ٹریڈ یونینز ایسوسی ایشنز کے تمام نمائندوں اور لیڈران کو اس تمام تربین الاقوامی اور ملکی صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے سیاست و معیشت کے ان تمام داوپیچ کو سمجھتے ہوئے شعوری طور پر مزدورتحریک کو ملکی سطح پر بلاتفریق رنگ و نسل مذہب و قوم کے، یکجا کرنے کی اشد ضرورت کے تحت عملی اقدامات اٹھانے ہونگے۔ ٹریڈ یونین لیڈران کی موجودہ شعوری کیفیت کو دیکھے تو محنت کشوں مزدوروں ملازمین پر جتنے بھی تابڑ توڑ حملے ہورہے جس کا ہم نے اوپر تفصیل کے ساتھ ذکر کیا ہے سے آنکھیں چُرا کر ان حملوں کے خلاف خاطر خواہ عملی جدوجہد سے انحراف کررہے ہیں ۔

ایسی تیسی ماحولیات کی: صاحب کا آرڈر لو

باقی لوگ گاڑی کا ہارن بجاتے، ایک مزدور بھاگا بھاگا جاتا،آرڈر وصول کرتا اور آئس کریم گاڑی تک پہنچا دیتا۔اگر کسی بات پر شکایت ہوتی تو پھر زور زور سے ہارن بجایا جاتا،کوئی مزدور بھاگم بھاگ جاتا اور صاحب،بیوی اور بچوں کی شکایت سنتا۔شائد شکایت رفع کرنے کی بھی کوشش کرتا۔ اس کے بعد، بل ادا کرنے کے لئے پھر سے ہارن بجایا جاتا۔