Day: فروری 5، 2024

[molongui_author_box]

لداخ: ریاستی تشخص کی بحالی کیلئے مکمل ہڑتال، ہزاروں افراد کے احتجاجی مظاہرے

بھارت کے زیر انتظام لداخ میں ریاستی تشخص کی بحالی، 6thشیڈول میں شامل کئے جانے سمیت پارلیمانی نمائندگی اور دیگر مطالبات کے حصول کیلئے ہفتہ3فروری کو احتجاج کیا گیا۔ اس احتجاج کے سلسلہ میں لداخ میں مکمل پہیہ جام اور شٹر ڈاؤن ہڑتال کی گئی، جبکہ دونوں اضلاع کارگل اور لیہہ میں ہزاروں افراد نے احتجاجی مارچ کئے اور جلسے منعقد کئے۔

5فروری: حکمران طبقے کی کشمیریوں سے یکجہتی یا سامراجی عزائم

5فروری ہر سال پاکستان کی جانب سے بھارتی زیر انتظام جموں کشمیر کے مظلوم عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کے نام پر سرکاری سطح پر منایا جاتا ہے۔14 اگست کی طرح اس دن کومنانے کے لیے بھی بڑے پیمانے پر سرمایہ خرچ کیا جاتا ہے۔میڈیا میں بھرپور تشہیری مہم چلائی جاتی ہے۔پاکستان نواز سیاسی جماعتوں کے علاوہ ان سرکاری اور نیم سرکاری کالعدم مذہبی تنظیموں کے ذریعے مظلوم کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کا ڈھونگ رچایا جاتا ہے،جن کے ہاتھ پاکستان اور جموں کشمیرکے ہزاروں معصوم شہریوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں۔پاکستان کے حکمران طبقے اور فوجی اشرافیہ نے ایک طرف دہشتگردی کے خلاف جنگ کے نام پر ہزاروں پشتونوں کا قتل عام کیا اور ان کو بے گھر کیا،دوسری طرف انہی دہشتگردوں کو مظلوم کشمیریوں کے لیے مسیحا کی طور پر پیش کیاجارہا ہے۔