Day: اکتوبر 7، 2021


ادب کا نوبل انعام تنزانیہ کے عبدالرزاق گرنہ کے نام

بعض مبصرین کے مطابق عبدالرزاق گنرہ کو یہ انعام دے کر نوبل کمیٹی نے کوشش کی ہے کہ افروایشیائی ادب کو بھی تسلیم کیا جائے۔ یاد رہے 1901ء میں پہلا نوبل انعام دیا گیا تھا، 120 سالوں کے دوران یہ انعام جیتنے والوں میں سے 95 فیصد سے زائد یورپی اور شمالی امریکی ادیب شامل تھے۔

تاج محل

سینہ دہر کے ناسور ہیں کہنہ ناسور

یونیورسٹی پروفیسر کا خاندان سمیت کفن پوش احتجاجی جلوس

دنیا کے لیے یہ ایک چھوٹا سا احتجاج لگتا ہے لیکن حقیقت یہ ہے کہ طالبان کی جانب سے افغانستان میں ہر قسم کے احتجاج پر پابندی عائد کئے جانے کے باوجود اس بہادر خاندان نے باہر آ کر دنیا کو دکھانے کے لیے احتجاج کیا کہ ان کی خاموشی نے افغانستان کو ایک زندہ خواب میں بدل دیا ہے، لیکن دھمکیوں کے باوجود افغان سڑکوں پر آئیں گے، چاہے وہ تعداد میں کم ہی کیوں نہ ہوں، اپنی آواز بلند کریں گے۔ ان چھوٹے مظاہروں کے بعد مستقبل قریب میں بڑے احتجاج ہوں گے۔

سید علی شاہ گیلانی کی وصیت پر مبنی ویڈیو سامنے آنے کے بعد حریت کانفرنس میں دراڑیں

حریت کانفرنس پاکستان چیپٹر میں وہ سید علی گیلانی کے نمائندے کے طور پر نامزد ہوئے تو ذرائع کے مطابق انہوں نے ہی حریت رہنماؤں کی بدعنوانیوں، میڈیکل، انجینئرنگ سمیت دیگر تعلیمی نشستوں کی فروخت سمیت پراپرٹی کی تفصیلات سید علی گیلانی تک پہنچائیں جس کے بعد اکثر اوقات سید علی گیلانی حریت نمائندوں پر تنقید اور اصلاح کی اپیل کرتے رہے ہیں۔

مغرب بھی عمران خان کو جانتا ہے: پینڈورا پیپرز اور پی ٹی آئی بارے نارویجن اخبار کی رپورٹ

عمران خان اکثر دعویٰ کرتے ہیں کہ وہ جتنا مغرب کو جانتے ہیں اتنا کوئی نہیں جانتا۔ اب تو لگتا ہے کہ مغرب والے بھی عمران خان کو بہت جاننے لگے ہیں۔ دو دن قبل مغرب کے ایک امن پسند اور جمہوری ملک ناروے کے سب سے بڑے اور اہم روزنامہ ”آفتن پھوستن“ نے صفحہ اؤل پر وزیر اعظم عمران خان کی تصویر کے ساتھ سرخی لگائی ہے کہ ”انہوں نے کرپشن سکینڈل کے بعد اپنے ملک کیلئے نئے دور کا وعدہ کیا تھا اور اب ان کے اپنے ساتھی بے نقاب ہو گئے ہیں۔“

@RoznamaJ: ہمیں ٹوئٹر پر فالو کریں

اس لئے ’روزنامہ جدوجہد‘ صرف ایک اخبار نہیں، ایک تحریک ہے جس کا مقصد ہے متبادل میڈیا کی تعمیر تا کہ عوام دشمن، عورت دشمن، امن دشمن، ماحولیات دشمن اور رجعتی قوتوں کے بیانئے کو بے نقاب کر کے ایک ایسے پاکستان کا وژن پیش کیا جا سکے جو جمہوری، سوشلسٹ، ماحول دوست، فیمن اسٹ اور سیکولر ہو۔